ذکر

ج:اس میں کوئی شک نہیں کہ اِس طرح کی چیزیں انسان کی نفسیات پر اثر انداز ہوتی اور بہتری کا باعث بھی بن جاتی ہیں۔ ارتکازِ توجہ بجائے خود بہت سے امراض کا علاج ہے۔ اصول میں اس پر کوئی اعتراض نہیں کیا جا سکتا، لیکن اس میں چونکہ انھوں نے اللہ کے لفظ کو دیکھنے کے لیے کہا ہے اس وجہ سے اس کا بڑا اندیشہ ہے کہ یہ چیز ایک بدعت بن جائے اور بالکل اسی طرح صوفیانہ مراقبوں کی شکل میں رائج ہو جائے۔ دین کے معاملے میں ہمیشہ محتاط رہنا چاہیے۔

(جاوید احمد غامدی)