Wusat

وسعت اللہ خان


تعارف

بی بی سی


مضامین

جنوری کی ایک سرد صبح، واشنگٹن ڈی سی کا ایک زیرِ زمین سب وے اسٹیشن۔ انتہائی رش کا عالم۔ زن و مرد تیز تیز قدموں سے کام پر جا آ رہے ہیں۔ بس ایک شخص ہے جسے شاید کوئی عجلت نہیں۔ وہ سب وے کی سرد دیوار سے ٹیک لگائے وائلن بجا رہا ہے۔یورپ اور شمالی امریکا...


فکر ونظر سوال کی طاقت وسعت اللہ خان گزشتہ روز کراچی یونیورسٹی میں پاکستان اسٹڈی سینٹر کے تحت ’’ تاریخ اور جامعات‘‘ کے موضوع پر مورخ ڈاکٹر مبارک علی کی زیرِ صدارت نصف دن کی کانفرنس میں مقالے اور اعلیٰ پائے کی علمی گفتگو سننے اور کچھ سیکھنے کا ...


فکر ونظر ترجمے کی اہمیت وسعت اللہ خان                                                                                                                                    اگر مترجم نہ میسر ہوتا تو برطانوی سامراجی ہندوستان میں نوے برس تو کیا شای...


فکر ونظر ہم کون ہیں  وسعت اللہ خان       جب حضرت عیسیٰ کی پیدائش سے ڈیڑھ ہزار برس پہلے وسطی ایشیا کے آریا گھڑ سوار یورپ، مغربی اور جنوبی ایشیا میں پھیلنے شروع ہوئے تو جہاں جہاں بھی انھوں نے بستیاں بسائیں وہاں وہاں کے ہو رہے۔ یورپ میں یہ آریا...


    اگر آپ کو یاد ہو؟ کوئی چار برس پہلے اسلام آباد کی انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی کے نئے کیمپس میں ایک ہی دن میں دو خودکش حملے ہوئے تھے’ جن میں چھ طلبا و طالبات جاں بحق اور سینتیس زخمی ہوئے۔ پہلا دھماکا فیکلٹی آف شریعہ کے چیئرمین کے دفتر کے باہر ہو...


عالمی ادارہِ محنت نے خبردار کیا ہے کہ اگر حکومتوں نے مربوط حکمتِ عملی نہ بنائی توآنے والے دنوں میں کورونا وائرس کم ازکم ڈھائی کروڑ ملازمتیں مستقل ختم کر دے گا اور موجودہ طبی بحران کی جگہ طویل المعیاد معاشی بحران لے لے گا۔ویسے طبل بج چکا ہے۔اب تک ک...


جس کھڑکی کے قریب بیٹھ کر میں لکھائی پڑھائی کا کام کرتا ہوں، اسی کھڑکی کے باہر کونے میں چڑیا نے آج اپنا گھونسلہ مکمل کر لیا۔ اس کی آٹھ، نو سہیلیاں اور ایک طوطا مبارک باد دینے آئے ہیں۔ ایک چہچہاتی ہاؤس وارمنگ پارٹی چل رہی ہے۔ حالانکہ یہ سب مجھے دیکھ...


اکتوبر 1991، شمالی لندن، بی بی سی کی نوکری اختیار کیے پانچ ماہ گزر گئے تھے۔ اس دوران میں میرا صرف ایک گھر میں آنا جانا کھانا پینا تھا۔ جعفر اور فیروزہ جعفر عرف بجیا کا گھر۔جعفر بھائی نے ایک دن پوچھا ارے کراچی میں ہمارے ایک بھتیجے بھی رہتے ہیں طالب...


 انیس سو چونتیس میں نہ تو اس طرح سے پکی سڑکیں تھیں، نہ آرام دہ موبائل ٹرالرز، نہ بلٹ پروف جیکٹس، نہ موبائل فون، انٹرنیٹ، ٹی وی چینلز یا پھر ریڈیو۔ پھر بھی ماؤزے تنگ اور ان کے ساتھیوں نے فیصلہ کیا کہ چیانگ کائی شیک کے سات لاکھ فوجیوں کے گھیرے میں چ...


            جس طرح انیس سو تین کے بعد کیپٹن الفرڈ ڈریفس کیس کو فرانس میں اور انیس سو اناسی کے بعد بھٹو کیس کے فیصلے کو پاکستان میں کسی مقدمے میں کوئی بھی وکیل بطور نظیر یا حوالہ پیش کرنا پسند نہیں کرتا، کیا افضل گرو کے فیصلے کو کوئی بھی چوٹی کا بھ...


            پنجاب انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی کے ستر سے زائد مریض غیر معیاری ادویات کے سبب ہلاک ہو چکے ہیں عالمی ادارہِ صحت کے مطابق دنیا بھر میں اس وقت جتنی بھی ایلوپیتھک ادویات بن رہی ہیں ان میں سے کم از کم دس فیصد غیر معیاری یا جعلی ہیں۔ہر سال دنیا...


ٹی وی چینلز اور میڈیا کی بے لگام آزادی بلکہ بد اخلاقی پر ایک خوبصورت طنزیہ تحریر             مسائل کے حل کے لیے اب بس ایک شے درکار ہے یعنی لائیو ٹی وی کیمرہ۔ کام لگ بھگ پورا ہوچکا۔ اب قتل کرنے یا ہونے کے لیے کسی خنجر کی، گھر اور دفتر کی چار دیو...