Male

اقبال عظیم


مضامین

ہو چاہے اک زمانہ کسی رہنما کے ساتھ ہم ہیں قسم خدا کی فقط مصطفیٰ کے ساتھ منزل پہ ہم نہ پہنچے تو پہنچے گا اور کون  ہم جادہء سفر میں ہیں کس پیشوا کے ساتھ یہ ساری کائنات ہے لولاک آشنا منسوب ہر چراغ ہے نور الہدیٰ کے ساتھ رشتہ ہر ایک صبح کا شمس ال...


یہ مری اَنا کی شکست ہے، نہ دوا کرو نہ دعا کرو جو کرو تو بس یہ کرم کرو مجھے میرے حال پہ چھوڑ دو   جو کسی کو کوئی ستائے گا تو گلہ بھی ہونٹوں تک آئے گا یہ تو اک اصول کی بات ہے، جو خفا ہے مجھ سے کوئی تو ہو   یہ فقط تمھارے سوال کا مرا مختصر س...


جانے گھر سے کوئی گیا ہے گھر سْونا سْونا لگتا ہے  گھر کے بچے بچے کا چہرہ اْترا اْترا لگتا ہے  ہم باہر سے گھر کیا لوٹے ہیں سب کو پرائے لگتے ہیں اب جو بھی ہم سے ملتا ہے کچھ روٹھا روٹھا لگتا ہے  یہ کس کو خبر تھی اس کو بھی دکھ دینے کے ڈھب آتے ہ...


  نعت میں کیسے کہوں ان کی رضا سے پہلے میرے ماتھے پہ پسینہ ہے ثنا سے پہلے   نور کا نام نہ تھا عالمِ امکاں میں کہیں جلوۂ صاحب لولاک لما سے پہلے   اْن کا در وہ درِ دولت ہے جہاں شام و سحر بھیک ملتی ہے فقیروں کو صدا سے پہلے  ...


حالِ دل کس کو سنائیں آپ کے ہوتے ہوئے اور دَر پہ کس کے جائیں آپ کے ہوتے ہوئے میں غلام مصطفی ﷺ ہوں یہ مری پہچان ہے غم مجھے کیوں کر ستائیں آپ ﷺ کے ہوتے ہوئے شانِ محبوبی دکھائی جائے گی محشر کے دن کون دیکھے گا خطائیں آپ ﷺ کے ہوتے ہوئے زلفِ محبوبِ...